قرآن حکیم            

مکمل سورت
سورت نمبر
آیت نمبر
ایک آیت
(81) سورۃ التکویر (مکی، آیات 29)
بِسْمِ اللّـٰهِ الرَّحْـمٰنِ الرَّحِيْـمِ
اِذَا الشَّمْسُ كُوِّرَتْ (1)
جب سورج کی روشنی لپیٹی جائے۔
وَاِذَا النُّجُوْمُ انْكَدَرَتْ (2)
اور جب ستارے گر جائیں۔
وَاِذَا الْجِبَالُ سُيِّـرَتْ (3)
اور جب پہاڑ چلائے جائیں۔
وَاِذَا الْعِشَارُ عُطِّلَتْ (4)
اور جب دس مہینے کی گابھن اونٹنیاں چھوڑ دی جائیں۔
وَاِذَا الْوُحُوْشُ حُشِرَتْ (5)
اور جب جنگلی جانور اکھٹے ہوجائیں۔
وَاِذَا الْبِحَارُ سُجِّرَتْ (6)
اور جب سمندر جوش دیے جائیں۔
وَاِذَا النُّفُوْسُ زُوِّجَتْ (7)
اور جب جانیں جسموں سے ملائی جائیں۔
وَاِذَا الْمَوْءُوْدَةُ سُئِلَتْ (8)
اور جب زندہ درگور لڑکی سے پوچھا جائے۔
بِاَيِّ ذَنْبٍ قُتِلَتْ (9)
کہ کس گناہ پر ماری گئی تھی۔
وَاِذَا الصُّحُفُ نُشِرَتْ (10)
اور جب اعمال نامے کھل جائیں۔
وَاِذَا السَّمَآءُ كُشِطَتْ (11)
اور آسمان کا پوست اتارا جائے۔
وَاِذَا الْجَحِيْـمُ سُعِّرَتْ (12)
اورجب دوزخ دہکائی جائے۔
وَاِذَا الْجَنَّـةُ اُزْلِفَتْ (13)
اور جب جنت قریب لائی جائے۔
عَلِمَتْ نَفْسٌ مَّآ اَحْضَرَتْ (14)
تو ہر شخص جان لے گا کہ وہ کیا لے کر آیا ہے۔
فَلَآ اُقْسِمُ بِالْخُنَّسِ (15)
پس میں قسم کھاتا ہوں پیچھے ہٹنے والے (ستارے) کی۔
اَلْجَوَارِ الْكُنَّسِ (16)
سیدھے چلنے والے غیب ہو جانے والے ستارو ں کی۔
وَاللَّيْلِ اِذَا عَسْعَسَ (17)
اور قسم ہے رات کی جب وہ جانے لگے۔
وَالصُّبْحِ اِذَا تَنَفَّسَ (18)
اور قسم ہے صبح کی جب وہ آنے لگے۔
اِنَّهٝ لَقَوْلُ رَسُوْلٍ كَرِيْمٍ (19)
بے شک یہ قرآن ایک معزز رسول کا لایا ہوا ہے۔
ذِىْ قُوَّةٍ عِنْدَ ذِى الْعَرْشِ مَكِيْنٍ (20)
جو بڑا طاقتور ہے عرش کے مالک کے نزدیک بڑے رتبہ والا ہے۔
مُّطَاعٍ ثَمَّ اَمِيْنٍ (21)
وہاں کا سردار امانت دار ہے۔
وَمَا صَاحِبُكُمْ بِمَجْنُـوْنٍ (22)
اور تمہارا رفیق (رسول) کوئی دیوانہ نہیں ہے۔
وَلَقَدْ رَاٰهُ بِالْاُفُقِ الْمُبِيْنِ (23)
اور اس نے اس (فرشتہ) کو (آسمان کے) کھلے کنارے پر دیکھا بھی ہے۔
وَمَا هُوَ عَلَى الْغَيْبِ بِضَنِيْنٍ (24)
اور وہ غیب کی باتوں پر بخیل نہیں ہے۔
وَمَا هُوَ بِقَوْلِ شَيْطَانٍ رَّجِيْمٍ (25)
اور وہ کسی شیطان مردود کا قول نہیں ہے۔
فَاَيْنَ تَذْهَبُوْنَ (26)
پس تم کہاں چلے جا رہے ہو۔
اِنْ هُوَ اِلَّا ذِكْرٌ لِّلْعَالَمِيْنَ (27)
یہ تو جہان بھر کے لیے نصیحت ہی نصیحت ہے۔
لِمَنْ شَآءَ مِنْكُمْ اَنْ يَّسْتَقِـيْمَ (28)
اس کے لیے جو تم میں سے سیدھا چلنا چاہے۔
وَمَا تَشَآءُوْنَ اِلَّآ اَنْ يَّشَآءَ اللّـٰهُ رَبُّ الْعَالَمِيْنَ (29)
اور تم تو تب ہی چاہو گے کہ جب اللہ چاہے گا، جو تمام جہان کا رب ہے۔