قرآن حکیم            

مکمل سورت
سورت نمبر
آیت نمبر
ایک آیت
(71) سورۃ نوح (مکی، آیات 28)
بِسْمِ اللّـٰهِ الرَّحْـمٰنِ الرَّحِيْـمِ
اِنَّـآ اَرْسَلْنَا نُـوْحًا اِلٰى قَوْمِهٓ ٖ اَنْ اَنْذِرْ قَوْمَكَ مِنْ قَبْلِ اَنْ يَّاْتِـيَـهُـمْ عَذَابٌ اَلِـيْـمٌ (1)
بے شک ہم نے نوح کو اس کی قوم کی طرف بھیجا تھا کہ اپنی قوم کو ڈرا اس سے پہلے کہ ان پر دردناک عذاب آ پڑے۔
قَالَ يَا قَوْمِ اِنِّىْ لَكُمْ نَذِيْرٌ مُّبِيْنٌ (2)
اس نے کہا کہ اے میری قوم! بے شک میں تمہارے لیے کھلم کھلا ڈرانے والا ہوں۔
اَنِ اعْبُدُوا اللّـٰهَ وَاتَّقُوْهُ وَاَطِيْعُوْنِ (3)
کہ اللہ کی عبادت کرو اور اس سے ڈرو اور میرا کہا مانو۔
يَغْفِرْ لَكُمْ مِّنْ ذُنُـوْبِكُمْ وَيُؤَخِّرْكُمْ اِلٰٓى اَجَلٍ مُّسَمًّى ۚ اِنَّ اَجَلَ اللّـٰهِ اِذَا جَآءَ لَا يُؤَخَّرُ ۖ لَوْ كُنْـتُـمْ تَعْلَمُوْنَ (4)
وہ تمہارے لیے تمہارے گناہ بخش دے گا اور تمہیں ایک وقت مقرر تک مہلت دے گا، بے شک اللہ کا وقت ٹھہرایا ہوا ہے جب آجائے گا تو اس میں تاخیر نہ ہوگی کاش تم جانتے۔
قَالَ رَبِّ اِنِّىْ دَعَوْتُ قَوْمِىْ لَيْلًا وَّنَهَارًا (5)
کہا اے میرے رب میں نے اپنی قوم کو رات اور دن بلایا۔
فَلَمْ يَزِدْهُـمْ دُعَآئِىٓ اِلَّا فِرَارًا (6)
پھر وہ میرے بلانے سے اور بھی زیادہ بھاگتے رہے۔
وَاِنِّىْ كُلَّمَا دَعَوْتُهُـمْ لِتَغْفِرَ لَـهُـمْ جَعَلُوٓا اَصَابِعَهُـمْ فِىٓ اٰذَانِـهِـمْ وَاسْتَغْشَوْا ثِيَابَـهُـمْ وَاَصَرُّوْا وَاسْتَكْـبَـرُوا اسْتِكْـبَارًا (7)
اور بے شک جب کبھی میں نے انہیں بلایا تاکہ تو انہیں معاف کر دے تو انہوں نے اپنی انگلیاں اپنے کانوں میں رکھ لیں اور انہوں نے اپنے کپڑے اوڑھ لیے اور ضد کی اور بہت بڑا تکبر کیا۔
ثُـمَّ اِنِّىْ دَعَوْتُهُـمْ جِهَارًا (8)
پھر میں نے انہیں کھلم کھلا بھی بلایا۔
ثُـمَّ اِنِّـىٓ اَعْلَنْتُ لَـهُـمْ وَاَسْرَرْتُ لَـهُـمْ اِسْرَارًا (9)
پھر میں نے انہیں علانیہ بھی کہا اور مخفی طور پر بھی کہا۔
فَقُلْتُ اسْتَغْفِرُوْا رَبَّكُمْ اِنَّهٝ كَانَ غَفَّارًا (10)
پس میں نے کہا اپنے رب سے بخشش مانگو بے شک وہ بڑا بخشنے والا ہے۔
يُـرْسِلِ السَّمَآءَ عَلَيْكُمْ مِّدْرَارًا (11)
وہ آسمان سے تم پر (موسلا دھار) مینہ برسائے گا۔
وَيُمْدِدْكُمْ بِاَمْوَالٍ وَّّبَنِيْنَ وَيَجْعَلْ لَّكُمْ جَنَّاتٍ وَّّيَجْعَلْ لَّكُمْ اَنْهَارًا (12)
اور مال اور اولاد سے تمہاری مدد کرے گا اور تمہارے لیے باغ بنا دے گا اور تمہارے لیے نہریں بنا دے گا۔
مَّا لَكُمْ لَا تَـرْجُوْنَ لِلّـٰهِ وَقَارًا (13)
تمہیں کیا ہو گیا تم اللہ کی عظمت کا خیال نہیں رکھتے۔
وَقَدْ خَلَقَكُمْ اَطْوَارًا (14)
حالانکہ اس نے تمہیں کئی طرح سے بنایا ہے۔
اَلَمْ تَـرَوْا كَيْفَ خَلَقَ اللّـٰهُ سَبْعَ سَمَاوَاتٍ طِبَاقًا (15)
کیا تم نہیں دیکھتے کہ اللہ نے سات آسمان اوپر تلے (کیسے) بنائے ہیں۔
وَجَعَلَ الْقَمَرَ فِـيْهِنَّ نُـوْرًا وَجَعَلَ الشَّمْسَ سِرَاجًا (16)
اور ان میں چاند کو چمکتا ہوا بنایا اور آفتاب کو چراغ بنا دیا۔
وَاللّـٰهُ اَنْبَتَكُمْ مِّنَ الْاَرْضِ نَبَاتًا (17)
اور اللہ ہی نے تمہیں زمین میں سے ایک خاص طور پر پیدا کیا۔
ثُـمَّ يُعِيْدُكُمْ فِيْـهَا وَيُخْرِجُكُمْ اِخْرَاجًا (18)
پھر وہ تمہیں اسی میں لوٹائے گا اور اسی میں سے (پھر) باہر نکالے گا۔
وَاللّـٰهُ جَعَلَ لَكُمُ الْاَرْضَ بِسَاطًا (19)
اور اللہ ہی نے تمہارے لیے زمین کو فرش بنایا ہے۔
لِّـتَسْلُكُوْا مِنْـهَا سُبُلًا فِجَاجًا (20)
تاکہ تم اس کے کھلے راستوں میں چلو۔
قَالَ نُـوْحٌ رَّبِّ اِنَّـهُـمْ عَصَوْنِىْ وَاتَّبَعُوْا مَنْ لَّمْ يَزِدْهُ مَالُـهٝ وَوَلَدُهٝٓ اِلَّا خَسَارًا (21)
نوح نے کہا اے میرے رب! بے شک انہوں نے میرا کہنا نہ مانا اور اس کو مانا جس کو اس کے مال اور اولاد نے نقصان کے سوا کچھ بھی فائدہ نہیں دیا۔
وَمَكَـرُوْا مَكْـرًا كُبَّارًا (22)
اور انہوں نے بڑی زبردست چال چلی۔
وَقَالُوْا لَا تَذَرُنَّ اٰلِـهَتَكُمْ وَلَا تَذَرُنَّ وَدًّا وَّلَا سُوَاعًا وَّلَا يَغُوْثَ وَيَعُوْقَ وَنَسْرًا (23)
اور کہا تم اپنے معبودوں کو ہرگز نہ چھوڑو اور نہ ودّ اور سواع اور یغوث اور یعوق اور نسر کو چھوڑو۔
وَقَدْ اَضَلُّوْا كَثِيْـرًا ۖ وَلَا تَزِدِ الظَّالِمِيْنَ اِلَّا ضَلَالًا (24)
اور انہوں نے بہتوں کو گمراہ کر دیا اور (اب آپ) ان ظالموں کی گمراہی اور بڑھا دیجیے۔
مِّمَّا خَطِيٓـئَاتِـهِـمْ اُغْرِقُوْا فَاُدْخِلُوْا نَارًاۙ فَلَمْ يَجِدُوْا لَـهُـمْ مِّنْ دُوْنِ اللّـٰهِ اَنصَارًا (25)
وہ اپنے گناہوں کے سبب سے غرق کر دیے گئے پھر دوزخ میں داخل کیے گئے، پس انہوں نے اپنے لیے سوائے اللہ کے کوئی مددگار نہ پایا۔
وَقَالَ نُـوْحٌ رَّبِّ لَا تَذَرْ عَلَى الْاَرْضِ مِنَ الْكَافِـرِيْنَ دَيَّارًا (26)
اور نوح نے کہا اے میرے رب! زمین پر کافروں میں سے کوئی رہنے والا نہ چھوڑ۔
اِنَّكَ اِنْ تَذَرْهُـمْ يُضِلُّوْا عِبَادَكَ وَلَا يَلِـدُوٓا اِلَّا فَاجِرًا كَفَّارًا (27)
اگر تو نے ان کو چھوڑ دیا تو تیرے بندوں کو گمراہ کریں گے اور نسل بھی جو ہوگی تو فاجر اور کافر ہی ہوگی۔
رَّبِّ اغْفِرْ لِىْ وَلِوَالِـدَىَّ وَلِمَنْ دَخَلَ بَيْتِىَ مُؤْمِنًا وَّلِلْمُؤْمِنِيْنَ وَالْمُؤْمِنَاتِ ؕ وَلَا تَزِدِ الظَّالِمِيْنَ اِلَّا تَبَارًا (28)
اے میرے رب! مجھے اور میرے ماں باپ کو بخش دے اور اس کو جو میرے گھر میں ایماندار ہو کر داخل ہوجائے اور ایماندار مردوں اور عورتوں کو، اور ظالموں کو تو بربادی کے سوا اور کچھ زیادہ نہ کر۔